پھٹکڑی کا جادو پھٹکڑی سے گھربیٹھے کتنے ہی مسئلے حل کئے جاسکتے ہیں یہ جان کر آپ حیرت سے دنگ رہ جائیں

پھٹکڑی ویسے تو عام سی چیز ہے جو ہر جگہ با آسانی اور کم قیمت میں دستیاب ہے لیکن اس کی افادیت بہت ہی زیادہ ہے . بظاہر ہر حجام/ نائی کی دکان پر موجود یہ عام سی چیز کوئی عام چیز نہیں اس میں کتنے ہی فائدے پوشیدہ ہیں .انہی ادویاتی خصوصیات کے باعث مختلف بیماریوں کے علاج کے لیےبھی اس کا استعمال کیا جاتا ہے .

سر کی خشکی دور : صرف ایک چٹکی پھٹکڑی اور ایک چٹکی نمک شیمپو میں ملا کر سر دھونے سے خشکی دور ہو جاتی ہے . پمپلز: پھٹکڑی کو پیس لیں اور تھوڑا پانی ڈال کر اس کا پیسٹ بنالیں بیس منٹ تک پمپلز پر لگا رہنے کے بعد دھولیں

منہ پر بنے پمپلز ٹھیک ہو جائیں گے . ناک سے بدبو: اگر ناک سے بو آبی ہو تو پھٹکڑی کو پانی میں حل کر کےاس محلول سے ناک کی صفائی کر لیں تو اس عمل سے ناک سے بد بو آنا بند ہو جائے گی . کمرکے زخم: کسی بھی بیماری کے باعث مستقل بستر پر لیٹے رہنے سے زخم ہو جاتے ہیں جو تکلیف کا باعث بنتے ہیں .

پھٹکڑی کو باریک پیس کر انڈے کی سفیدی میں ملاکر زخموں پر لگانے سے زخم ٹھیک ہو جاتے ہیں. ہر قسم کی خارش : پھٹکڑی جلا کر راکھ بنا لیں اور اس میں ایک انڈے کی سفیدی ملا کر مساج کرنے سے ہر قسم کی خارش سے آرام ملتا ہے . منہ سے بیکٹریا : پھٹکڑی کے ساتھ ماؤتھ واش کرنے سے

منہ سے بیکٹریا ختم ہو جائیں گے اور منہ سے بد بو آنا بھی بند ہوجائےگی . زیادہ پسینہ آنا : جن لوگوں کوضرورت سے زیادہ پسینہ آتاہو وہ نہاتےوقت پانی میں پھٹکڑی ڈال کرنہائیں.اس مسئلےسےنجات مل جائےگی. ڈار ک سرکلز: بہت ساری کمرشل برانڈ ز ڈاک سرکلز کے خاتمے کے لیے اپنی پروڈکٹ میں پھٹکڑی پاؤڈر کا استعمال کر رہی ہیں.

پھٹکڑی پاؤڈر پانی میں مکس کر کے ڈارک سرکلز پر لگانے سے ختم ہو جائیں گے .لیکن خیال رکھیں کہ پھٹکڑی آنکھ کے اندر نہ جائے . اُمید کرتا ہوں کہ پھٹکڑی کے متعلق لکھا گیا یہ پوسٹ آپ کو پسند آیا ہو گا اور اس کو لائیک اور شئیر کرنا مت بھولیے گا. پھٹکڑی کا جادو پھٹکڑی سے گھربیٹھے کتنے ہی مسئلے حل کئے جاسکتے ہیں یہ جان کر آپ حیرت سے دنگ رہ جائیں گے.

پھٹکڑی ویسے تو عام سی چیز ہے جو ہر جگہ با آسانی اور کم قیمت میں دستیاب ہے لیکن اس کی افادیت بہت ہی زیادہ ہے . بظاہر ہر حجام/ نائی کی دکان پر موجود یہ عام سی چیز کوئی عام چیز نہیں اس میں کتنے ہی فائدے پوشیدہ ہیں .انہی ادویاتی خصوصیات کے باعث مختلف بیماریوں کے علاج کے لیےبھی اس کا استعمال کیا جاتا ہے .

سر کی خشکی دور : صرف ایک چٹکی پھٹکڑی اور ایک چٹکی نمک شیمپو میں ملا کر سر دھونے سے خشکی دور ہو جاتی ہے . پمپلز: پھٹکڑی کو پیس لیں اور تھوڑا پانی ڈال کر اس کا پیسٹ بنالیں بیس منٹ تک پمپلز پر لگا رہنے کے بعد دھولیں

منہ پر بنے پمپلز ٹھیک ہو جائیں گے . ناک سے بدبو: اگر ناک سے بو آبی ہو تو پھٹکڑی کو پانی میں حل کر کےاس محلول سے ناک کی صفائی کر لیں تو اس عمل سے ناک سے بد بو آنا بند ہو جائے گی . کمرکے زخم: کسی بھی بیماری کے باعث مستقل بستر پر لیٹے رہنے سے زخم ہو جاتے ہیں جو تکلیف کا باعث بنتے ہیں .

پھٹکڑی کو باریک پیس کر انڈے کی سفیدی میں ملاکر زخموں پر لگانے سے زخم ٹھیک ہو جاتے ہیں. ہر قسم کی خارش : پھٹکڑی جلا کر راکھ بنا لیں اور اس میں ایک انڈے کی سفیدی ملا کر مساج کرنے سے ہر قسم کی خارش سے آرام ملتا ہے . منہ سے بیکٹریا : پھٹکڑی کے ساتھ ماؤتھ واش کرنے سے

منہ سے بیکٹریا ختم ہو جائیں گے اور منہ سے بد بو آنا بھی بند ہوجائےگی . زیادہ پسینہ آنا : جن لوگوں کوضرورت سے زیادہ پسینہ آتاہو وہ نہاتےوقت پانی میں پھٹکڑی ڈال کرنہائیں.اس مسئلےسےنجات مل جائےگی. ڈار ک سرکلز: بہت ساری کمرشل برانڈ ز ڈاک سرکلز کے خاتمے کے لیے اپنی پروڈکٹ میں پھٹکڑی پاؤڈر کا استعمال کر رہی ہیں.

پھٹکڑی پاؤڈر پانی میں مکس کر کے ڈارک سرکلز پر لگانے سے ختم ہو جائیں گے .لیکن خیال رکھیں کہ پھٹکڑی آنکھ کے اندر نہ جائے . اُمید کرتا ہوں کہ پھٹکڑی کے متعلق لکھا گیا یہ پوسٹ آپ کو پسند آیا ہو گا اور اس کو لائیک اور شئیر کرنا مت بھولیے گا. پھٹکڑی کا جادو پھٹکڑی سے گھربیٹھے کتنے ہی مسئلے حل کئے جاسکتے ہیں یہ جان کر آپ حیرت سے دنگ رہ جائیں گ